Latest News

ناروے کےممبران پارلیمنٹ نے تیخانووسکایا کو 2022 کے نوبل امن انعام کے لیے نامزد کیا

ناروے کےممبران پارلیمنٹ نے تیخانووسکایا کو 2022 کے نوبل امن انعام کے لیے نامزد کیا
اوسلو:ناروے کے دو ارکان پارلیمنٹ اولیگ بولسٹاڈ اور ہیرک ایلونس نے بیلاروسی صدارتی امیدوار سویتلانا تیخانوسکایا کو 2022 کے نوبل امن انعام کے لیے نامزد کیا ہے۔ یہ معلومات مسز تیخانووسکایا کے سینئر مشیرفرانیک ویاکورکا نے دی۔ مسز تیخانووسکایا کو 2021 میں بھی امن کے نوبل انعام کے لیے نامزد کیا گیا تھا لیکن انھیں یہ ایوارڈ نہیں ملا۔ سینئر مشیر ویا کورکا نے جمعہ کو ٹویٹر پر لکھا: "ناروے کے دوارکان پارلیمنٹ کرسچن ڈیموکریٹک پارٹی کے رہنما اولیگ بولسٹاڈ اور کنزرویٹو پارٹی کے رہنما ہیرک ایلونس نے تیخانووسکایا کو 2022 کے نوبل امن انعام کے لیے نامزد کیا۔ یہ ان تمام بیلاروسیوں کے لیے ایک فرق ہے جو آزادی کے لیے لڑتے رہیں گے۔‘‘ بیلاروس کے موجودہ صدر الیگزینڈر لوکاشینکو نے اگست 2020 کے انتخابات میں اپنی چھٹی مدت سنبھالی۔ بیلاروس میں سیاسی بحران ایک طویل عرصے سے جاری ہے۔ حزب اختلاف کی جماعت نے انتخابی نتائج کو قبول نہیں کیا اور دعویٰ کیا ہے کہ حقیقت میں سویتلانا تیخانووسکایا نےالیکشن جیتا ہے۔ اس تنازع کے نتیجے میں ملک بھر میں زبردست احتجاجی مظاہرے ہوئے۔


Comments


Scroll to Top